رواں برس حج کے دوران ’حرمین ٹرین‘ خواتین ڈرائیورز چلائیں گی

0 7

ریاض: سعودی عرب میں ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے وژن 2030 کے تحت خواتین کو مزید بااختیار بنایا جا رہا ہے اور انھیں روزگار کی فراہمی سمیت دیگر امور کا بھی حصہ بنایا جا رہا ہے۔

عرب میڈیا کے مطابق حج کے دوران مکہ سے مدینہ اور مدینہ سے واپسی مکہ چلنے والی خصوصی ٹرینوں کے لیے خواتین ڈرائیورز کو بھی تربیت دی گئی ہے اور رواں سال حج میں 32 خواتین ڈرائیورز ’حرمین ٹرین‘ چلائیں گی۔

450 کلومیٹر کا سفر 2 گھنٹے میں طے کرنے والی حرمین ٹرین میں 72 ہزار عازمین کی گنجائش ہوگی۔ یہ ٹرین عازمین حج کے لیے بنائے گئے مختلف اسٹاپس پر رکا کرے گی۔

خواتین ڈرائیورز کی تربیت کورونا وبا کے دوران ٹرین سروس بند ہونے کے دوران کی گئی ہے۔ ملکی اور غیر ملکی سطح پر حرمین ٹرین میں خواتین ڈرائیورز کی آزمائش کو سراہا جا رہا ہے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل ہی مسجد الحرام اور مسجد نبوی میں سیکیورٹی کے فرائض کی انجام دہی کے لیے بھی خواتین اہلکاروں کو تعینات کیا جا چکا ہے جس سے خواتین عازم حج کو کافی سہولت ہوئی ہے۔

اپنی رائے دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.