دریائے جہلم میں سیلابی صورتحال سے نمٹنے کیلئے تمام ادارے انتظامات مکمل کریں۔ کاشف محمود

جہلم: ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو کاشف محمود نے کہا ہے کہ دریائے جہلم میں سیلاب اور طغیانی کی امکانی صورتحال سے نمٹنے اور پیش بندی کے طور پر ہر ممکن حفاظتی اقدامات کے لئے تمام متعلقہ سرکاری محکمے اور ادارے اپنی تیاریاں اور انتظامات ہر لحاظ سے مکمل کریں تاکہ بوقت ضرورت ریسکیو سرگرمیوں میں کوئی رکاوٹ پیش نہ آئے اور متاثرین سیلاب کی ہر ممکن مدد ہو سکے۔

یہ ہدایات انہوں نے پری فلڈ انتظامات کے حوالے سے ڈسٹرکٹ ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے جاری کیں۔ جس میں ممکنہ سیلاب کے پیش نظر تمام اقدامات کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں ڈپٹی ڈائریکٹر واپڈا نے منگلا ڈیم میں پانی کے ان فلو، آؤٹ فلو اور پانی کے ذخائر بارے تفصیلی بریفنگ دی۔

اس موقع پر انجینئر سعید احمد ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ریسکیو 1122 نے سیلابی صورتحال میں پیدا ہونے والے حالات پربریفنگ دی۔ جس میں سیلابی صورتحال میں لوگوں کو ریسکیو کرنے کے حوالے سے فلڈ سیکٹرز کی تشکیل، ریسکیورز کی سیلاب زدہ علاقوں میں تعیناتی، ہنگامی حالات میں لوگوں کو انخلا، ڈوبتے ہوئے لوگوں کو بچانے اور ان کو فرسٹ ایڈ فراہم کرنے جیسے اقدامات کا بتایا گیا۔

اجلاس میں تحصیلوں کے اسسٹنٹ کمشنرز، محکمہ صحت، محکمہ آبپاشی، محکمہ تعلیم، لائیو سٹاک اور باقی تمام ضلعی اداروں کے سربراہان نے شرکت کی۔

کاشف محمود نے کہا کہ ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے ساتھ ساتھ دیگر تمام اداروں کی طرف سے بھی ہر سال دریاؤں میں سیلاب اور طغیانی کے سیزن کے دوران ریسکیو آپریشن کی تیاریاں بروقت مکمل کی جاتی ہیں تاکہ جس قدر ممکن ہو سکے جانی اور مالی نقصانات کو روکا جاسکے، انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے انتظامیہ کے افسران اور دیگر متعلقہ محکموں اور اداروں کے افسران کو بھی ہدایات جاری کی جاچکی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ سیلاب کی اطلاع دینے والے مراکز سے رابطے، دریا کے کنارے اور نشیبی علاقوں میں آباد مکینوں کو بروقت آگاہ کرنے اور متاثرین تک خوراک اور ہنگامی طبی امداد پہنچانے سے متعلق ادارے اپنا ورکنگ پلان تیار رکھیں تاکہ بوقت ضرورت ہنگامی اقدامات میں کوئی کوتاہی نہ ہو۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button