جہلم میں سورج سوا نیزے پر، پارہ 48 کو چھو گیا، بجلی کی لوڈشیڈنگ اور گرمی سے شہریوں کا برا حال

دینہ: ضلع بھر میں سورج سوا نیزے پر، گزشتہ سالوں کی طرح اس سال بھی ریکارڈ گرمی،بجلی کی لوڈشیڈنگ، شدید گرمی اور حبس سے شہریوں کا برا حال، پارہ 48ڈگری کو چھوگیا۔

تفصیلات کے مطابق ملک کے دوسرے شہروں کی طرح جہلم شہرمیں بھی بجلی کی لوڈشیڈنگ کے ساتھ ساتھ گرمی کی شدت میں روز بروز اضافہ ہوتا جا رہاہے۔ بدھ کے روز ضلع جہلم اور اس کے گردو نواح میں درجہ حرارت 48ڈگری سینٹی گریڈ تک پہنچ چکا ہے۔ صوبہ پنجاب میں سب سے زیادہ درجہ حرارت جہلم میں ریکارڈ کیا گیا جبکہ ہوا میں 23 فیصد نمی ریکارڈ کی گئی۔

محکمہ مو سمیات کے مطابق آئندہ ہفتے پری مون سون بارشوں کا ایک نیا سلسلہ شروع ہونے والا ہے جس سے گرمی کی شدت میں کمی واقع ہو گی۔

بجلی کی بدترین غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ اور گرمی کی اس بڑھتی ہوئی شدت کی وجہ سے شہریوں کا برا حال ہے جبکہ دوپہر کے وقت جہلم شہر کی بارونق بننے والی سٹر کیں، گلی، محلے سنسان دیکھائی دیئے۔ تاہم کام کاج کی غرض سے گھروں سے نکلنے والے شہری گرمی کی اس لہر سے بچنے کے لیے ٹھنڈے پانی اور مشروبات کا سہارالے رہے ہیں۔

گنے کا رس، لیموں پانی، صندل کا شربت، ستو، املی آلو بخارے کا شربت گرمیوں کے خاص مشروبات ہیں جو آج کل عوامی توجہ کا مر کز بنے ہوئے ہیں۔ جہلم کے شہری گرمی کی اس شدت سے بچنے کے لیے بارانِ رحمت کے انتظار میں ہیں۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ اب بارش ہی موسم کے طیور تبدیل کر سکتی ہے۔ دوسری جانب انسانوں کے ساتھ ساتھ معصوم پرندے بھی اس گرمی کی بڑھتی ہوئی شدت سے نڈھال دکھائی دیتے ہیں یہ پرندے درختوں کے سائے اور مختلف جگہوں پہ بنے پانی کے جوہڑوں میں بیٹھ کہ گرمی سے بچنے کی کوشش کر تے دکھائی دیتے ہیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button