سیکرٹری آر ٹی اے کی عدم توجہی، ویگنوں کے منشیوں نے آرٹی اے کے اختیارات سنبھال لئے

جہلم: سیکرٹری ڈسٹرکٹ روڈ ٹرانسپورٹ اتھارٹی کی عدم توجہی ویگنوں کے منشیوں نے آرٹی اے کے اختیارات سنبھال لئے، مسافر سراپا احتجاج، ٹرانسپورٹروں نے اندرون ضلع اور جی ٹی روڈ کے مختلف رو ٹس کے کرایوں میں از خود اضافہ کر دیا، کرایوں میں اضافے کے باعث مسافروں اورکنڈیکٹروں میں لڑائی جھگڑے روزانہ کا معمول بن گئے۔

تفصیلات کے مطابق پٹرولیم مصنوعات میں اضافے کے ساتھ ہی اندرون ضلع سمیت جی ٹی روڈ پر چلنے والی ٹرانسپورٹ کے مالکان نے آرٹی اے سیکرٹری کے اختیارات استعمال کرتے ہوئے کرایوں میں از خود اضافہ کر دیا، اندرون ضلع چلنے والی ٹرانسپورٹ کے کرایوں میں 10 سے 15 روپے فی مسافر اضافہ کر دیاگیا ہے جبکہ بین الاضلاعی ٹرانسپورٹ کے کرایوں میں 30 سے40 فیصد کا اضافہ کر دیا گیا ہے۔

کرایوں میں اضافے پر جب مختلف ٹرانسپورٹرزسے پوچھا گیا تو انہوں نے کہا کہ جب بھی پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ ہوتا ہے ، جس کو مد نظر رکھتے ہوئے مجبوراً کرایوں میں اضافہ کرنا پڑتا ہے ،متعلقہ محکمے نے نہ تو کوئی نوٹیفکیشن جاری کیا ہے اور نہ ہی اس حوالے سے کسی قسم کے کوئی احکامات جاری کئے گئے ہیں جس کیوجہ سے مجبوراً کرایوں میں اضافہ کرنا پڑتا ہے۔

دوسری جانب مسافروں کا کہنا ہے کہ باقاعدہ ایک سرکاری ادارہ قائم ہے جس نے مسافروں اور ٹرانسپورٹرز کے درمیان پل کا کردار ادا کرتے ہوئے کرایوں کا تعین کرنا ہوتا ہے ، لیکن بدقسمتی سے ضلع جہلم میں تعینات ذمہ داران نے مسافروں اور شہریوں کے مسائل سے لا تعلقی اختیار کر رکھی ہے ، جس کیوجہ سے ضلع بھر میں جنگل کا قانون نافذ ہے۔

مسافروں نے ڈپٹی کمشنر جہلم نعمان حفیظ سے مطالبہ کیا ہے کہ ضلع جہلم میں چلنے والی ٹرانسپورٹ کے کرایوں کا پنجاب روڈ ٹرانسپورٹ اتھارٹی کے مقررہ کردہ شیڈول کے مطابق تعین کیا جائے اضافی کرایہ وصول کرنے والے ٹرانسپورٹرز اور ٹرانسپورٹرز کی پشت پناہی کرنے والے افسران کے خلاف قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے تاکہ ضلع بھر میں نافذ جنگل کے قانون کا خاتمہ ہو سکے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button