حکومت اور ضلعی انتظامیہ بازار رات 9 بجے بند کرنے کے فیصلے پر نظر ثانی کرے۔ تاجر برادری

جہلم: شہر کی تاجربرادری نے کہا ہے کہ حکومت اور ضلعی انتظامیہ مارکیٹیں رات 9 بجے بند کرنے کے فیصلے پر نظر ثانی کرے، اس فیصلے پر عمل درآمد ہوا تو شہر کے تاجر جو پہلے ہی کورونا کیوجہ سے تباہ ہو چکے ہیں، مزید بدحالی کا شکار ہو جائیں گے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے جہلم پریس کلب کے نمائندہ وفد سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ ڈپٹی کمشنر شہر کے تاجروں کی آواز کو حکام بالا تک پہنچائیں اور رات9 بجے مارکیٹیں بند کرنے کے فیصلے کو عید تک موخر کریں، عید کے بعد شہر کے تمام تاجر اور دکاندار حکومت اور ضلعی انتظامیہ سے مکمل تعاون کریں گے، رات 9 بجے مارکیٹیں اور دکانیں بند کر دیا کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ سارا سال تاجر عید کا انتظار کرتے ہیں اپنی مصنوعات کو عید پر فروخت کرنے کے خواہاں ہوتے ہیں اور چونکہ گرمی کا موسم ہے اس لئے لوگ رات کے وقت خریداری کے لئے نکلتے ہیں اگر مارکیٹیں دکانیں رات 9 بجے بند ہو گئیں تو ان کا مال دکانوں میں پڑا پڑا بے کار ہو جائیگا جس سے تاجروں کو خاصا نقصان ہونے کا اندیشہ ہے۔

تاجروں نے وزیراعلیٰ پنجاب سے مطالبہ کیاہے کہ عیدالاضحیٰ تک تاجروں کو چھوٹ دی جائے تاکہ تاجر اپنے بیوی بچوں کے لئے رزق کما سکیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button