یوریا کھاد کی مقرر کردہ ریٹ 1850روپے پر دستیابی کو یقینی بنایا جائے گا۔ ڈپٹی کمشنر کامران خان

جہلم: ڈپٹی کمشنر جہلم کامران خان کی زیرصدارت کاشتکاروں کو کھاد کی مقررہ نرخوں پر بروقت فراہمی کا جائزہ لینے کے لیے اہم اجلاس منعقد ہوا۔

ڈپٹی کمشنر نے حکومت پنجاب کی طرف سے جاری کردہ ہدایات پر عملدرآمد کو یقینی بنانے کا حکم دیا اور کہا کہ یوریا کھاد کی مقرر کردہ ریٹ 1850روپے پر دستیابی کو یقینی بنایا جائے، کوئی بھی کھاد ڈیلر یا دوکاندار کسی صورت بھی زائد قیمت وصول نہیں کرے گا، تمام کھاد ڈیلرز اور دوکاندار کھاد ریٹس کے پینا فلیکس نمایاں جگہ پر آویزاں کریں۔

ڈپٹی کمشنر نے تمام کھاد ڈیلرز کو ہدایات جاری کی کہ شام آٹھ بجے کے بعد کوئی کھاد فروخت نہیں کی جائے گی۔ ڈیلر صاحبان کسانوں کو کھاد فروخت کرتے وقت کیش میمو جاری کریں گے اور اس کا ریکارڈ کاؤنٹر فائل میں رکھیں گے۔

انہوں نے کہا کہ آمد کھاد وفروخت کھاد کا ریکارڈ روزانہ کی بنیاد پر مکمل کرے اور دفتر زراعت ارسال کریں۔ کسانوں کو کھاد فروخت کرتے وقت کس قسم کی ٹائی اپ کی شرط لاگو نہیں ہوگی اور نیز آمد کھاد کی اطلاع فوری طور پر متعلقہ زراعت کے دفتر کریں تاکہ اس کی جانچ پڑتال کا عمل مکمل کیا جاسکے۔

اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل مطاہر حیات وٹو، اسسٹنٹ کمشنرز، محکمہ زراعت کے افسران اور کھاد ڈیلرز اور کسان نمائندگان نے شرکت کی۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button