قومی مرکز بچت میں اربوں روپے جمع کروانے والے کھاتہ دار سڑکوں پر رُلنے لگے

جہلم: شہر کے اکلوتے قومی مرکز بچت میں اربوں روپے جمع کروانے والے کھاتہ دار سڑکوں پر رُلنے لگے۔

گرمی اور حبس کے موسم میں کئی کئی گھنٹے قومی مرکز بچت کے باہر بوڑھے اور خواتین کی لائنیں لگی ہوتی ہیں، قومی مرکز بچت کے ذمہ داران معمر شہریوں، خواتین کو سہولیات دینے میں بری طرح ناکام ہیں۔

علی الصبح بزرگ شہری، خواتین قومی مرکز بچت دفتر کے باہر بے یارو مددگار لائنوں میں لگ جاتے ہیں جن کے لئے کسی قسم کی کوئی سہولت میسر نہیں جبکہ عملے کی جانب سے عجیب و غریب بہانے سننے کو ملتے ہیں کہ عملہ کم ہونے، کمپیوٹر سسٹم خراب ہونے، انٹرنیٹ کی رفتار کم ہونے کیوجہ سے تاخیر ہوتی ہے۔

اس حوالے سے بزرگ شہریوں نے وزیراعظم پاکستان سے مطالبہ کیا ہے کہ مرکز قومی بچت میں فرض شناس ایماندار افسران و اہلکاروں کو تعینات کیا جائے تاکہ بزرگوں اور خواتین کھاتہ داروں کی مشکلات میں کمی واقع ہو سکے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button