پنڈدادنخان میں جپسم سے بھری تیز رفتار اوور لوڈ ٹرالیاں اور ڈمپر کی وجہ سے حادثات میں اضافہ

پنڈدادنخان:  ٹریفک پولیس اورپٹرولنگ کی غفلت یا ملی بھگت، تحصیل پنڈدادنخان میں جپسم کے بڑے بڑے پتھر ڈمپروں اور ٹرالیوں کی باڈی سے باہر گر نا معمول بن گیا، سڑک پر گرے پتھر حاد ثات کا سبب بننے لگے، منتھلی کا جادو پولیس کارروائی سے گریزاں،مہینے کے اختتام پر محدود کاغذی کارروائی کرکے سب اچھا کی رپورٹ قابل افسران کی تعیناتی کی جائے۔ اہل علاقہ کا مطالبہ

تفصیلات کے مطابق ضلع جہلم کے دوسرے بڑے شہر کھیوڑہ میں پہاڑوں سے نکلنے والا جپسم جو کہ پنڈدادنخان روڈ کے اطراف واقع جپسم فیکٹریوں میں دیا جاتا ہے، پٹرولنگ پولیس ،ٹریفک پولیس سمیت ذمہدران کی مبینہ ملی بھگت سے ٹریکٹر ٹرالیوں والے تقر یبا اٹھارہ سے بیس ٹن اور ڈمپروں والے 50 سے 60 وزن لوڈ کر لیتے ہیں جوکہ گاڑیوں کی باڈی سے بھی کئی فٹ اونچا ہوتا ہے۔

اوور لوڈنگ کے باعث یہ پتھر مین روڈ پر گرتے ہیں جو کہ پاس سے گزرتی گاڑیوں کے ساتھ ساتھ موٹر سائیکل سواروں اور رکشہ والوں کے لیے بھی مشکلات اور حادثات کا باعث بنتے ہیں اوورلوڈنگ کے باعث بہت سے حادثات رونما ہوچکے ہیں جن میں متعدد افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں اور بہت سے معذور بھی ہوچکے ہیں۔

ذمہ داران کی بے حسی کے باعث اوور لوڈنگ کرنے والوں کے خلاف موثر کارروائیاں نہیں کی جاتی جس کی وجہ سے دن رات کھیوڑہ پنڈدادنخان اور لِلہ روڈ پر لاتعداد ٹریکٹر ٹرالیاں اوورلوڈنگ اور اونچی آواز میں ساؤنڈ لگا کر پٹرولنگ پولیس اور ٹریفک پولیس کا منہ چڑ ھاتے نظر آتے ہیں اور ان پر سوار بہت سے کم عمر ڈرائیور ایسے بھی دیکھنے کو ملتے ہیں جن کا نہ تو قومی شناختی کارڈ ہوتا ہے اور نہ ہی ڈرائیونگ لائسنس جو کہ مقامی انتظامیہ سمیت ضلعی انتظامیہ کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے؟۔

عوامی سماجی حلقوں نے ڈی پی او جہلم سمیت ذمہ داران محکموں سے استدعا کی ہے کہ کم عمر ناتجربہ کار اوورلوڈنگ کرنے والے ڈرائیوروں کے خلاف کریک ڈاون کیا جائے اور پٹرولنگ پولیس اور ٹریفک پولیس کے قابل اورفرض شناس افسران کو تحصیل پنڈدادنخان میں تعینات کیا جائے تاکہ عملی طور پر اوورلوڈنگ پر قابو پایا جا سکے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button