للِہ تا جہلم دورویہ سڑک؛ فواد چوہدری کی کاوشیں رنگ لے آئیں، پنجاب حکومت 5 ارب دے گی

0 6

جہلم: سابق وفاقی وزیر کی کاوشیں رنگ لے آئیں، حکومت پنجاب للِہ تا جہلم دورویہ سڑک کی تعمیر کے لیے پانچ ارب جاری کرے گی، پاکستان مسلم لیگ (ن) نے حکومت بنتے ہی عوامی منصوبے کے فنڈز روک دئیے تھے، پنجاب میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کی حکومت جاتے ہی سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری نے للِہ تا جہلم دورویہ سڑک کی تعمیر کے لیے کوششیں تیز کر دیں، سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری کی وزیراعلی پنجاب سے اہم سڑک کی تعمیر کے لیے گفتگو،مسائل سے آگاہ کیا۔

رپورٹ کے مطابق سابق وفاقی وزیر چوہدری فواد حسین نے طویل جدوجہد کے بعد للِہ تا جہلم دورویہ سڑک سابقہ دور حکومت میں منظور کروائی تھی جس کا سنگ بنیادسابق وزیر اعظم پاکستان عمران خان نے نومبر 2021ء میں رکھا تھا لیکن جیسے ہی حکومت تبدیل ہوئی تو للِہ جہلم روڈ کا منصوبہ بھی سیاست کی نظر کردیا گیا، فنڈز دیگر اضلاع میں منتقل کردئیے گئے۔

سڑک کی تعمیر رکنے سے عوام کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ اس منصوبے کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لیے سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری نے ہر محاذ پر آواز اٹھائی،ہائی کورٹ راولپنڈی بینچ میں پٹیشن بھی دائر کی۔

پنجاب میں حکومت تبدیلی کے بعد جیسے ہی چوہدری پرویز الٰہی وزیر اعلی منتخب ہوئے ہیں سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری نے للِہ جہلم روڈ کی جلد تعمیر اور فنڈز کے لیے بھی کوششیں تیز کر دی ہیں۔ انہوں نے وزیر اعلی پنجاب سے اس اہم منصوبے کے لیے جلد سے جلد فنڈز جاری کرنے کی بات کی ہے۔

اس حوالے سے جب سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے کہا ہم نے ہمیشہ عوامی مفاد اور حلقے کی تعمیروترقی ترقی کی بات کی ہے، للِہ جہلم روڈ میرے حلقے کا اہم مسئلہ تھا جسے شروع کروایا لیکن مسلم لیگ ن نے آتے ہی اس منصوبے کو سیاست کی بھینٹ چڑھا دیا۔

فواد چوہدری نے کہا کہ چونکہ یہ وفاق کا منصوبہ ہے لیکن اسکے باوجود میری وزیر اعلی پنجاب چوہدری پرویز الٰہی سے بات ہوئی ہے انشاء اللہ اگلے دو تین روز میں پنجاب حکومت للِہ جہلم دورویہ سڑک کی تعمیر کے لیے رواں مالی سال پانچ ارب روپے جاری کرے گی دوبارہ اس منصوبے کی تعمیر شروع ہو گی۔

انہوں نے کہا مسلم لیگ(ن) کے بونے اس عوامی مسئلہ کے لیے نہ آواز اٹھا سکے نہ فنڈز لا سکے، انشاء اللہ ہم فنڈ بھی لائیں گے اور پایہ تکمیل تک بھی پہنچائیں گے۔

اپنی رائے دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.